گرما گرم خبریں

شرقی علا قہ میں ہو نے والی ڈکیتی کی واردات کا ضرور سراغ لگا یا جا ئے گا ،ایس ایچ او تھا نہ گو جر خان
نکاسی آ ب کے منصو بے سے شہریوں کو بے پناہ فا ئدہ حاصل ہو گا ، سید ندیم عباس بخاری
تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ کی تعیناتی میرٹ پر کی جا ئے گی
اسلام آ باد بندش کے ذمہ دار تحریک لبیک یا رسول اللہ کے مظا ہرین نہیں بلکہ حکمران ہیں ،پی پی پی گو جر خان
سی پیک کا منصو بہ نواز شریف کاعظیم تحفہ ہے ،را جہ طا ہر کیانی

چو ہدری نثار علی کی سیاست سے علیحدگی گو جر خان کی سیاست پرکیا اثرات مرتب ہونگے؟

چو ہدری نثار علی کی سیاست سے علیحدگی گو جر خان کی سیاست پرکیا اثرات مرتب ہونگے؟
تجزیہ :احمد نواز کھو کھر

گو جر خان کے معروف صحافی اور تجزیہ کار احمد نواز کھو کھر نے کہا ہے کہ وزیر داخلہ چو ہدری نثار علی کی سیاست سے علیحدگی کے گو جر خان کی سیاست پر گہرے اثرات نمو دار ہو نگے مگر اس بات کے امکا نات مو جود ہیں کہ چو ہدری نثار کومنا لیا جا ئے۔ گو جر خان ایکسپریس کے نمائندہ عبد الستار نیازی نے جب احمد نواز کھو کھر سے را بطہ کر کے ان سے چو ہدری نثار کی پریس کانفرنس کے بارے میں پو چھا تو انہوں نے کہا کہ ملکی سیاست پر انکے استعفے کے با رے میں میڈیا پر بہت کچھ کہا جا رہا ہے میں گو جر خان کی سیاست پر انکے اثرات پر بات کروں گا۔ انکے سیاست چھوڑنے کے اعلان پر سب سے زیا دہ دھچکا تو ممبر ضلع کو نسل اور چئیرمین ضلع کونسل کے امیدوار را جہ سجاد سرور کو لگا ہو گا۔ جنہوں نے آج ہی اخبار میں اشتہار دیکر چو ہدری نثار کے ساتھ اظہار یکجہتی کیا تھا۔ سجاد سرور سے پو چھا جا سکتا ہے کہ کیا آپ راولپنڈی کے صف اول کے راہنماؤں میں سے تھے جنکے لیے چو ہدری نثار سے اظہار ؛الفت؛ ضروری تھا۔ آخر ڈویثرن کے ڈیڑھ درجن ممبران اسمبلی کو، جنہیں چو ہدری نثار نے ٹکٹ دئے، وہ خاموش ہیں اور بھر آ پکے ایم این اے اور ایم پی اے خاموش ہیں تو آپ کو کیا پڑی کہ ایسی غیر سیاسی اور بچگانہ حرکت کی۔ آ پکے اس فعل سے چو ہدری نثار کو کیا فائدہ ملا۔ میں سمجھتا ہوں کہ انہوں نے اپنا سیاسی مستقبل تباہ کر لیا۔وہ ایک اچھے وثر نری اور ابھرتے ہو ئے سیاستدان تھے اور ضلع کونسل کی چئیرمینی کے فیورٹ بھی،انکے لیے بہت سے امکا نات تھے۔ سیاست میں آج کا دن حرف آ خر نہیں ہو تا ہے۔ احمد نوا ز کھو کھر نے کہا کہ ایم این اے راجہ جا وید اخلاص،ایم پی اے افتخار احمد وارثی اور ایم پی اے شو کت بھٹی کو بھی اس صورتحال سے خاصی پر یشانی ہو ئی ہو گی۔ یہ تینوں ممبران اسمبلی عمومی طور پر چو ہدری نثار اور وزیر اعظم کے مابین کشمکش سے دور تھے۔ مگر اس بات میں بھی کو ئی شک نہیں یہ چو ہدری نثار کے قریبی رفقا میں سے تھے اور انکی سیاست کا زیادہ تر دارو مدار چو ہدری نثار کی سیاست اور انکی حکمت عملی کے ساتھ تھا،یہ چو ہدری نثار ہی تھے جنہوں نے جا وید اخلاص کو ن لیگ میں لا یا اور پھر ٹکٹ دلا یا۔ گو جر خان کے عوام چو ہدری نثار کی وہ تقریر نہیں بھو لے جس میں انہوں نے چو ہدری ریاض کو چیچڑ قرار دیا تھا۔ را قم نے ٹکٹوں کی تقسیم سے بہت پہلے کہہ دیا تھا کہ ٹکٹ اسے ملے گا جسے چو ہدری نثار چاہیں گے اور پھر وہی ہوا۔چو ہدری نثار نے چو ہدری ریاض دشمنی میں جا وید اخلاص کو ٹکٹ دیا اس بات کے با وجود کہ انکا شمار پر ویز مشرف کے قریبی رفقا میں ہو تا تھا۔ آج گو جر خان کا اگر کوئی سیاستدان سب سے زیادہ خوش ہو گا تو اسکا نام چو ہدری ریاض ہے چو ہدری نثار کی تقریر کے بعد مجھے انکے کچھ قریبی دو ستوں کے فون آئے جو بے حد خوش نظر آرہے تھے اور انکی خوشی بنتی بھی ہے چو ہدری نثار کا ایک مخصوص انداز سیاست تھا اور شاید ہی راولپنڈی کا کوئی ن لیگی ہو گا جسکو انہوں نے بے عزت نہ کیا ہو اس لسٹ میں بڑے بڑے نام ہیں۔گذشتہ چند ماہ سے چو ہدری ریاض ٹکٹ کے لیے بہت زیادہ پر امید تھے مگر ان انکی امیدیں بہت زیادہ ہو گئی ہیں۔ اس میں کو ئی شک نہیں کہ سابق وزیر اعظم را جہ پر ویز اشرف کے بعد کسی کی اپنی جماعت میں تعلقات ہیں تو وہ چو ہدری ریاض ہیں۔ احمد نواز کھو کھر نے کہا کہ آ نے والے دنوں میں بہت سی سیاست بدلنے والی ہے ہمارے ن لیگیوں کے پاس اس بات کے سوا کو ئی چارہ نہیں کہ وہ اپنی جماعت کے ساتھ وفا دار رہیں ویسے گو جر خان کے تینوں ممبران اسمبلی کو اس بات کے نمبر دئے جا سکتے ہیں کہ وہ وزیر اعظم اور چو ہدری نثار کے مابین کشمکش میں خاموش رہے اب کچھ بھی ہو یہ حا لات اور وقت پر منحصر ہے البتہ اس بات میں بھی کو ئی شک نہیں کہ آ نے والے دن پیپلز پارٹی کے را جہ پر ویز اشرف اور پی ٹی آئی کے چو ہدری محمد عظیم کے لیے اچھے ہیں ظاہر ہے انکے حریف کمزور ہو رہے ہیں۔ دیکھتے آ نے والے دنوں کا بدلاؤ کس پر کیا اور کتنا اثر ڈالتا ہے؟

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

error: