گرما گرم خبریں

نکاسی آ ب کے منصو بے سے شہریوں کو بے پناہ فا ئدہ حاصل ہو گا ، سید ندیم عباس بخاری
سی پیک کا منصو بہ نواز شریف کاعظیم تحفہ ہے ،را جہ طا ہر کیانی
اسلام آ باد بندش کے ذمہ دار تحریک لبیک یا رسول اللہ کے مظا ہرین نہیں بلکہ حکمران ہیں ،پی پی پی گو جر خان
تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال کے میڈیکل سپرنٹنڈنٹ کی تعیناتی میرٹ پر کی جا ئے گی
شرقی علا قہ میں ہو نے والی ڈکیتی کی واردات کا ضرور سراغ لگا یا جا ئے گا ،ایس ایچ او تھا نہ گو جر خان

یاد رفتگاں

راجہ احسان الحق
یونین کونسل قاضیاں سے ملحقہ موضع عالم آباد کے گاؤں ڈھوک ہاشو کی سر

زمین پر ایک ایسے عظیم شخص نے جنم لیا جس نے اپنی جوانی سے موت کی آغوش میں جانے سے پہلے تک عوام کی دن رات خدمت کی ایک ایسی یادگار مثال قائم کی جس کو لوگ برسوں یاد رکھیں گے۔ وہ ہیں یعقوب بھٹی جنہوں نے اپنی زندگی کے قیمتی 13سال فوج میں رہتے ہوئے ملکی سرحدوں کی حفاظت میں گزارے اور با عزت ریٹائرمنٹ لینے کے بعد طویل عرصہ جرمن میڈیکل کمپنی میں رہے اور اس دوران فرض شناسی ، مخلص پنی اور انتہا درجے کی ایمانداری کی وجہ سے کمپنی نے نہ صرف ان کو بیشمار اسناد سے نوازا بلکہ جرمنی میں مستقل سکونت اختیار کرنے کی دعوت بھی دی ۔اس ادارے میں یونین کے حوالے سے ملکی سطح پر مرکزی حیثیت میں رہے اور اس دوران بھی وہ جہاں جس مقام پر گئے اپنے علاقے کی خیر خواہی ، بھلائی اور ترقیاتی کاموں کو پایہ تکمیل تک پہنچانے میں کوئی کسر اٹھا نہ رکھی۔انہوں نے جرمنی جانے کی آفر کو ٹھکراتے ہوئے عوام علاقے کی خدمت کو مقدم سمجھتے ہوئے بلدیاتی انتخابات میں حصہ لیا اور مسلسل دو بار جنرل کونسلر منتخب ہوئے لیکن اس سے پہلے بھی پچھلی کئی سالوں سے وہ علاقے کی خدمت میں ہمہ تن دن رات مصروف رہے اس دوران ان کی انتھک جدو جہد اور شب و روز محنت سے پورے علاقے میں بے شمار ترقیاتی کام ہوئے ۔ کئی سال پہلے گاؤں کی تنگ ترین گلیوں کی وجہ سے یہاں بجلی کا آنا انتہائی دشوار بلکہ نا ممکن تھا اور واپڈا والوں نے صاف انکار کر دیا لیکن ایسے نا ممکنہ حالات میں یعقوب بھٹی نے واپڈا افسران کو بڑی دلیری اور پر اعتماد ہو کر کہا آپ کھمبے پہنچائیں ان کو لگوانا میرا کام ہے اور پھر ان ہی کی بدولت اس علاقے میں بجلی بھی پہنچ گئی۔ ان کے قریبی رفقاء میں سے راجہ جلیل احمد ایسے ہیں جنہوں نے سیاسی و سماجی خدمات میں ان کے ساتھ کئی سال گزارے اور ان کے بقول یعقوب بھٹی اپنے اندر غریبوں، یتیموں ، مساکینوں اور علاقے کا درد رکھنے والے انسان تھے۔ ہر وقت علاقے کی بہتری کیلئے بے چین رہتے۔ وہ ہر ماہ چند دوستوں کی وساطت سے علاقے بھر کے غریب لوگوں میں ہزاروں روپے کی زکوٰۃ و خیرات تقسیم کرتے تھے۔ انہوں نے اپنی زندگی کا ایک ایک لمحہ علاقے کی خدمت میں گزارا ۔ دوسروں کے غم اور خوشی میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینا ان کی زندگی کا اوڑھنا بچھونا تھا۔ راجہ جلیل نے یہ بھی بتایا مرحوم 40دن مسلسل بیماری کے دوران ہسپتال میں زیر علاج ہونے کے باوجود بھی ہر لمحے علاقے کی بہتری، ترقیاتی کاموں اور دیرینہ مسائل کے حل کے حوالے سے محو گفتگو رہتے ۔راجہ احسان الحق نے کہا بلا شبہ یعقوب بھٹی کی شفقت ، علاقے سے محبت ، غربا کی مدد، ترقیاتی کام کی داستان ایک طرف تو دوسری طرف ڈھوک ہاشو کے تمام گھروں کو سیلاب ، بارش سے محفوظ کرنے کیلئے جتنی لمبی دیوار انہوں نے بنوائی اس علاقے بھر کی آنے والی نسلیں بھی ان کا احسان نہیں چکا سکتیں۔موصوف کی عاجزی ، انکساری اور عوام دوستی کا یہ عالم تھا کہ جب بھی گاؤں سے شہر جاتے تو واپسی پر ان کی گاڑی لوگوں کے ساز و سامان سے بھری ہوتی تھی اور سب سے بڑی بات یہ کہ ان کا چاہے کتنے سے کتنا بڑا مخالف کیوں نہ ہو ان کی خداداد صفات کا کھلم کھلا اعتراف کرتا تھا۔ یہی وجہ ہے ان کی فوتگی کی اطلاع ملتے ہی ہر آنکھ اشکبار تھی پورا علاقہ سوگوار تھا۔ علاقے کا بچہ بچہ ، بوڑھے ، مرد عورتیں اپنے ہاتھ آسمان کی طرف بلند کر کے ان کی بخشش کی دعائیں مانگ رہے تھے۔ ان کی سیاسی اور سیاسی خدمات پر لکھنے کو بہت صفحات درکار ہیں لیکن یوں کہوں تو بیجا نہ ہو گا یعقوب بھٹی سے مخلص اور وفادار لوگ مدتوں بعد پیدا ہوتے ہیں۔ دعا ہے خدا ان کو جنت الفردوس میں اعلیٰ ترین مقام عطا فرمائے۔ آمین۔

موت اس کی جس کا کرے زمانہ افسوس
یوں تو دنیا میں آئے ہیں سبھی مرنے کیلئے
راجہ احسان الحق (قاضیاں ) گوجر خان (0300-5261181)

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

error: