گرما گرم خبریں

نیشنل ہائی وے اینڈ موٹر وے پولیس سیکٹر نارتھ ٹو کی سالانہ ایوارڈ تقریب کا انعقاد
چوہدری زاہد جٹ نے اپنی برادری سمیت تحریک انصاف میں شامل ہونے کا اعلان کردیا
تحریک انصاف میں شمولیت پر راجہ حسیب کیانی کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں،رضوان ہاشمی
ضلع چکوال کی سیاست میں آنے والے چند دنوں میں بڑی سیاسی تبدیلیاں رونما ہورہی ہیں
پولیس پٹرولنگ پولیس ٹھاکرہ موڑ چوکی نے مختلف کاروائیوں میں چھ مقدمات درج
نیا پاکستان بنانے کیلئے پرعزم ہیں،چوہدری جاوید کوثر ایڈووکیٹ
کمپیوٹرائزڈ لینڈریکارڈ سنٹر گوجرخان عوام کیلئے دردسر بن گیا

Archive for: January 11th, 2018

گوجر خان پو لیس نے مرغوں کی لڑائی پر جوا کھیلتے ہو ئے چار افراد کو گرفتار کر لیا 


گوجرخان (نامہ نگار) گوجر خان پو لیس نے مرغوں کی لڑائی پر جوا کھیلتے ہو ئے چار افراد کو گرفتار کر لیا جبکہ تین فرار ہو گئے جنکے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا ہے ۔پولیس نے بیول میں امجد،حاجی اصغر اور ہم ایوں کے ڈیرے سے جوا کھیلنے پر محمد اکرم منگھوٹ،محمد شہزاد کلر سیداں، طاہر محمود کلر سیداں مدثر جہلم محمد طاہراور سہراب حسین کو گر فتار کر لیا جبکہ حاجی وسیم سیمی، استاد فاروق اور محمد گلزار فرار ہو گئے پو لیس نے داؤ پر لگی ہوئی 13790روپے نقدی،7مو بائل اور گا ڑی قبضہ میں لے لی تمام ملزمان کو حوا لات میں بند کر دیا گیا ہے ۔

زوال پذیر معاشرے میں محافل میلاد کا انعقاد باعث برکت ہے،علامہ مفتی محمد حنیف قریشی 


سکھو (نمائندہ خصوصی) زوال پذیر معاشرے میں محافل میلاد کا انعقاد باعث برکت ہے، جہاں زکر رسول کی بہاریں ہوں وہاں شر ختم ہو جاتا ہے، ان خیالات کا اظہار سربراہ شباب اسلامی پاکستان علامہ مفتی محمد حنیف قریشی نے گزشتہ روز کھلابٹ میں محفل میلاد سے خطاب کرتے ہوئے کیا، انہوں نے کہا کہ بے راہ روی اور زوال پذیر معاشرے میں جہاں بیشمار برائیاں پھیل چکی ہوں تو وہاں محافل میلاد کا انعقاد باعث برکت ہوتا ہے، اللہ اور اس کے رسول کا زکر شر کو ختم کر دیتا ہے، میلاد مصطفے کے اہتمام سے پورا سال برکتوں اور رحمتوں کا نزول ہوتا ہے، جہاں مسلمان اکٹھے ہوکر ولادت مصطفے کا زکر کریں رسول اللہ کی صورت و سیرت کا بیان کریں تو اس جگہ اور اس اجتماع پر اللہ کی رحمتیں نازل ہوتی ہیں، کھلابٹ میں منعقدہ محفل میلاد مصطفے میں جید علماء4 کی کثیر تعداد سمیت اہلیان علاقہ نے بھرپور شرکت کی،محفل کے اختتام پر علامہ مفتی محمدحنیف قریشی نے امت مسلمہ کی سرفرازی اور ملک پاکستان کی سلامت و استحکام کے لیے دعا کی۔

حقیقی کامیابی یورپ کی رنگینیوں میں نہیں محمد عربی کے دین میں ہے،حاجی اظہر عطاری 


سکھو (نمائندہ خصوصی) حقیقی کامیابی یورپ کی رنگینیوں میں نہیں محمد عربی کے دین میں ہے، آج کا نوجوان مغرب کی تقلید میں تباہی کے دہانے پر پہنچ چکا ہے، ان خیالات مبلغ دعوت اسلامی و رکن شوری علامہ حاجی اظہر عطاری نے جامع مسجد فیضان مدینہ سکھو میں سالانہ اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کیا، انہوں نے کہا کہ یورپ کی تقلید میں ہماری نسل دین سے دور ہوچکی ہے، جس کی وجہ سے شراب، فحاشی و بے حیائی اپنے عروج پر پہنچ چکی ہے، نوجوان نسل دین سے دوری کی وجہ سے تباہی کے دہانے پر پہنچ چکی ہے، حاجی اظہر عطاری نے کہا کہ مسلمان کی اصل کامیابی دین متعین کے نافذ کیے ہوئے اصولوں کے مطابق زندگی گزارنے میں ہے، ہمیں مغرب کی تقلید چھوڑ کر محمد عربی کے دین کو اپنانا ہوگا اسی میں ہماری فلاح و کامیابی ہے، دعوت اسلامی کے زیراہتمام جامع مسجد فیضان مدینہ سکھو میں منعقدہ سالانہ اجتماع و محفل میلاد مصطفے میں رہنماء4 پاکستان تحریک انصاف چوہدری محمدعظیم، راجہ ہارون کیانی، اور سماجی شخصیت قاضی وقار کاظمی نے بطور مہمان خصوصی شرکت کی، سالانہ اجتماع میں علاقہ کے علماء4 کرام اور عاشقان رسول کی کثیرتعداد نے شرکت کی، اجتماع کے اختتام پر علامہ حاجی اظہر عطاری نے امت مسلمہ اور پاکستان کے تحفظ سلامتی و استحکام کے لیے دعا کی۔

آفتاب کیانی کی والدہ انتقال کرگئی


سکھو (نمائندہ خصوصی) آفتاب کیانی کی والدہ اور عدنان موبائل زون سکھو والے کی نانی گزشتہ روز انتقال کرگئی، مرحومہ کو ان کے آبائی گاوں للہیال شریف میں سینکڑوں سوگواران کی موجودگی میں سپرد خاک کر دیا گیا، نماز جنازہ میں محمد مظہر جنرل کونسلر یوسی کرنب الیاس سمیت علاقہ کی سیاسی و سماجی شخصیات کی کثیر تعداد نے شرکت کی اور مرحومہ کے ایصال ثواب اور درجات میں بلندی کی دعا کی۔

ایم پی اے چوہدری حید رسلطان کی جیت،کریڈٹ کی جنگ شروع


ڈھڈیال(تجزیہ : ریاض بٹ)ایم پی اے چوہدری حید رسلطان کی جیت کوا بھی چوبیس گھنٹے بھی نہیں گزرے ہوں گے کہ سوشل میڈیا اور لوکل اخبارات میں جیت کا کریڈٹ لینے کیلئے جدوجہد شروع ہوگئی ۔ حقائق کو نظر انداز کرتے ہوئے کسی نے کسی ہیرو بناڈالا اور پتہ نہیں کیا کیا القابات ایجاد کیے گئے جیسے کوئی ایسا معرکہ سر کیا گیا جو جس پر تغمات دینا ضروری ہو۔ پاکستان کی سیاست میں ہمیشہ شاہ سے زیادہ شاہ کے وفاداری کا راج رہا ہے اور انہی وفاداروں کے ہاتھوں ہیرو سے زیرو بنے ہیں۔ چکوال کی موجودہ سیاسی صورت حال سے اب کو ئی بھی بے خبر نہیں۔ حقائق اور عقیدت دومختلف چیزیں ہیں لیکن سیاسی جماعتوں کے حامی حقائق کو نظرانداز کرکے عقیدت میں کیا کچھ کہ دیتے ہیں ہوسکتا ہے جس کیلئے کہا جارہا ہو وہ بھی سن کر شرمندہ ہو جائے۔ پاکستان مسلم لیگ ن کے قائد میاں نوازشریف کی نااہلی کے بعد مسلم لیگ ن کی مقبولیت کم کرنے کیلئے جہاں مختلف حربے استعمال کیے جارہے ہیں وہاں پر یہ حربہ بھی استعمال کیا جارہا ہے کہ ضمنی الیکشن میں مسلم لیگ ن کے نامزد امیدواروں کی کم سے کم ووٹوں سے جیت ہوتاکہ عوام میں یہ تاثر دیا جاسکے کہ اب مسلم لیگ ن کی عوام میں مقبولیت کم ہورہی ہے ۔ ان ہتھکنڈوں کے سدباب کیلئے مسلم لیگ ن نے موثر اقدامات کیے ہیں او ر ضمنی الیکشن میں پارٹی کی رابطہ مہم کو مانیٹر کرنے کیلئے خصوصی ٹیمیں تشکیل دی جاتی ہیں جو ضمنی الیکشن پر کڑی نظر رکھتے ہوئے اعلیٰ حکام صورت حال سے باخبر رکھتی ہے جن کی روشنی میں موثر اقدامات کیے جاتے ہیں تاکہ مخالفین کے ہتھکنڈوں کو ناکام بنا یا جاسکے ۔چوہدری لیاقت علی خان کی وفات کے بعد ہونے والے ضمنی الیکشن کی سب سے خاص بات یہی تھی کہ مسلم لیگ ن کا نامزد امیدوار بھاری اکثریت سے کامیاب ہوتاکہ عوام میں یہ تاثر پھیل سکے کہ مسلم لیگ ن کی مقبولیت کم نہیں ہورہی ہے۔ اس صورت حال کے پیش نظر اس ضمنی الیکشن کو انتہائی سنجیدگی سے لیا گیا اور مسلم لیگیوں نے حسب روایت اپنے اعلیٰ قائدین کو مایوس نہیں کیا۔ اس جیت کا کریڈٹ کس کو دیاجائے ۔ اس کیلئے ہمیں ماضی کے اوراق میں جھانکنا ہوگا۔ چوہدری حیدر سلطان اس حلقہ میں ضمنی الیکشن لڑرہے تھے جو انہیں اپنے سیاسی ورثے میں ملا تھا ۔ ان کے والد محترم 1985ء کے غیر جماعتی انتخابات میں چکوال کے سیاسی میدان میں آئے اور ہمیشہ کامیابی نے ان کے قدم چومے۔1985کے بعد 2008,97,93,90,88اور 2013کے عام انتخابات میں انہوں نے کامیابی حاصل کی ۔ صرف 2002کے الیکشن میں ان کی جگہ ان کی اہلیہ نے حصہ لیا اور مسلم لیگ ق کے چوہدری اعجاز فرحت ممبر صوبائی اسمبلی بنے ۔ حالیہ ضمنی الیکشن میں چوہدری حیدر سلطان اپنے والد کے دیئے ہوئے بھرپور سیاسی ورثہ کے ساتھ انتخابی میدان میں اترے ۔ ان کی جیت میں تو کسی کو کوئی شک نہ تھا ۔ اندازے صرف یہ لگائے جارہے تھے کہ وہ کتنی اکثریت سے جیتیں گے ۔ موجودہ سیاسی صورت حال کو پیش نظر رکھتے ہوئے تما م سیاسی قوتوں نے اپنا بھرپور حصہ ڈالا۔ چوہدری لیاقت علی خان کے انتقال کے بعد ہمدردی کا ووٹ چوہدری حیدر سلطان کو ملا۔ ایم این اے میجر(ر) طاہر اقبال ، ملک نعیم اصغر اعوان، ایم پی اے سردار ذوالفقار دلہہ، سردار غلام عباس ، سردار آفتاب اکبر ، وائس چیئر مین ضلع کونسل چکوال چوہدری خورشید بیگ ، جنرل (ر) عبدالقیوم اور دیگر مسلم لیگ ن کی سرکردہ شخصیات نے بھرپور انداز میں رابطہ مہم چلائی اورسیاسی مخالفین کو ہر محاذ پر ناک آؤٹ کیا گیا۔ چوہدری لیاقت علی خان نے 2013 کے عام انتخابات میں62088ووٹ لیے تھے اور حالیہ ضمنی الیکشن میں چوہدری حیدر سلطان نے 75934ووٹ حاصل کرکے کامیابی حاصل کی ۔ اگر موجودہ لیڈ کا جائزہ لیا جائے تو اس میں ہمیں میاں حمزہ شہباز شریف کی اچھے نتائج پر شاندار پیکیج دینے کی یقین دہانی اور آخری لمحات میں مسلم لیگ ن کے قائد میاں نوازشریف کی چکوال آمد پر مسلم لیگیوں کے مورال میں اضافہ کونظر نہیں کرسکتے ۔چوہدری حیدر سلطان کی کامیابی میں تحریک خدام اہلسنت والجماعت کے کردار کو کسی صورت نظر انداز نہیں کیا جاسکتا۔ اگر اس موقع پر تحریک خدام چوہدری حیدرسلطان کی حمایت نہ کرتی تو تمام فعال مذہبی جماعتیں مسلم لیگ ن سے دو دو ہاتھ کرنے کیلئے تیار بیٹھی تھیں۔ پاکستان پیپلزپارٹی نے اپنے امیدوار نواب تیمورحسن کو دستبردار کراکر پی ٹی آئی کی حمایت کا اعلان کیا لیکن جانے والے بخوبی جانتے ہیں کہ پیپلزپارٹی کے حامیوں کی ایک بڑی تعداد نے پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان کے آصف علی زرداری کے خلاف استعمال کی گئی زبان پر صوبائی اور مقامی قیادت کے فیصلہ کو نظرانداز کرتے ہوئے مسلم لیگ ن کو ووٹ دیا جس کی وجہ سے مسلم لیگ ن کی برتری میں اضافہ ہوا۔ سابق ضلع ناظم سردار غلام عباس اب مسلم لیگ ن کا حصہ ہیں جن کا اکثریتی ووٹ انہیں تسلیم کرنے کو تیار نہیں۔سردار غلام عباس نے مسلم لیگ ن میں شمولیت سے قبل تقریباً 31 سال تک مسلم لیگ ن مخالف قوتوں کی نمائندگی کی ۔اسی وجہ سے حالیہ ضمنی الیکشن میں ان کے ووٹ بینک کو نقصان پہنچا جس کی وجہ وہ پی ٹی آئی اور تحریک لبیک میں چلا گیا ۔ اس کی ایک اور وجہ یہ بھی تھی کہ پی ٹی آئی کے امیدوار راجہ طارق افضل کالس سردار گروپ کا حصہ تھے اور سردار غلام عباس کی مسلم لیگ ن میں شمولیت کے بعد وہ پی ٹی آئی میں چلے گئے جس کی وجہ سے وہ سردار گروپ کے حامیوں پر اثر انداز ہوئے۔ مسلم لیگ ن کو اس وقت ملک میں متعدد چیلنجز کاسامنا ہے اور ان حالات میں مسلم لیگ ن کے حامیوں اور دھڑوں کو ’’ہیرو‘‘ اور ’’ طوفان‘‘کے چکروں سے نکل کر پارٹی کی مضبوطی کے لئے کام کرنا چاہیے۔ سردار غلام عباس مسلم لیگ ق کے دور میں اربوں کے ترقیاتی کام کروانے اور ضلع ناظم ہونے کے باوجود 2008ء کے الیکشن میں اپنے بھائی سردار نواب خان کو شکست سے نہ بچا سکے۔ 2013 کے الیکشن میں وہ حلقہ این اے 60کی تمام یونین کونسلوں کا دورہ کرنے کے بعد دوبارہ آدھی یونین کونسلوں میں اپنی رابطہ مہم مکمل کرچکے تھے تب پارٹی اعلیٰ قیادت نے میجر(ر) طاہر اقبال کو ٹکٹ دینے کا اعلان کیا اس وقت الیکشن میں صرف تین ہفتے ہی باقی رہ گئے تھے ۔ مسلم لیگ ن کے حامیوں نے اپنی پوری قوت اور جارحانہ انداز میں الیکشن لڑا اور میجر(ر) طاہر اقبال کو ایک لاکھ 30ہزار ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔ اس لیے یہ کہنا بجا ہوگا کہ اس الیکشن کا کوئی ہیرو نہیں۔ا گر حقیت میں کوئی ہیرو ہے تو وہ مسلم لیگ ن ہے باقی سب زیرو ہیں۔

صحافی کسی بھی علاقے کا اہم ترین اثاثہ ہوتے ہیں، چوہدری ابرار سرور، سید قلب عباس


دولتالہ(نامہ نگار)صحافی کسی بھی علاقے کا اہم ترین اثاثہ ہوتے ہیں دولتالہ اور گردونواح کے صحافی اپنی پیشہ ورانہ ذمہ داریاں بخوبی ادا کر رہے ہیں اور ان علاقوں میں ہونے والی ترقی میں ان کا بھی نمایاں کردار ہے ،مرکزی پریس کلب دولتالہ،پریس کلب سکھو،پریس کلب جاتلی،پریس کلب میانہ موہڑہ/کونتریلہ ،الیکٹرانک میڈیا دولتالہ کے پلیٹ فارم پر کام کرنے والے تمام صحافی خراج تحسین کے مستحق ،بلا شبہ سید منور نقوی کی قیادت میں غربی گوجرخان کے صحافی نمایاں خدمات سر انجام دے رہے ہیں ،ان خیالات کا اظہار چیئرمین یونین کونسل سکھو چوہدری ابرار سرور،چیئرمین یونین کونسل دولتالہ سید قلب عباس،سلیمان فاؤنڈیشن کے وائس چیئرمین ایم سلیم شیخ،جنرل کونسلر سکھو راجہ نقیب احمد نے مرکزی پریس کلب دولتالہ،پریس کلب سکھو،پریس کلب جاتلی،پریس کلب میانہ موہڑہ/کونتریلہ ،الیکٹرانک میڈیا دولتالہ اور اخبار فروش یونین دولتالہ کے نو منتخب عہدیداران کے اعزاز میں منعقدہ ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ،اس موقع پر تمام پریس کلب و یونین کے نو منتخب عہدیداران موجود تھے ،تقریب سے سرپرست اعلیٰ مرکزی پریس کلب دولتالہ سید منور نقوی،صدر پریس کلب دولتالہ راجہ حاجی احمد ،صدر پریس کلب سکھو راجہ پرویز اختر نے بھی خطاب کیا اور سیاسی و سماجی حلقوں کی جانب سے پذیرائی پر ان کا شکریہ ادا کیا

چیئرمین دولتالہ سید قلب عباس نے عوامی نمائندگی کا حق ادا کر دکھایا ،شیخ ساجد محمود 


دولتالہ(نامہ نگار)چیئرمین دولتالہ سید قلب عباس نے عوامی نمائندگی کا حق ادا کر دکھایا ہے جس طرح اندرون شہر دولتالہ کے مسائل کو حل کرنے کیلئے اقدامات اٹھائے جا رہے ہیں عوامی حلقوں میں اسے سراہا جارہا ہے ان خیالات کا اظہار مسلم یگ ن یوتھ ونگ کے رہنما شیخ ساجد محمود نے اپنے ایک بیان میں کیا،انہوں نے کہا کہ دولتالہ کئی گلیاں قیام پاکستان کے بعد پہلی مرتبہ کنکریٹ کی جا رہی ہیں ،وفاقی پارلیمانی سیکرٹری راجہ جاوید اخلاص،ایم پی اے راجہ شوکت عزیز بھٹی اور چیئرمین یونین کونسل دولتالہ کے ممنون و مشکور ہیں جن کی توجہ کے باعث دولتالہ کے دیرینہ مسائل حل ہو رہے ہیں ،ان کا مزید کہنا تھا کہ مسلم لیگ ن اپنی کارکردگی کی بنیاد پر آئندہ انتخابات میں بھی بھرپور کامیابی حاصل کرے گی

چوہدری حیدر سلطان کو بھاری اکثریت سے کامیاب کروا کر عوامی عدالت میں سرخرو ہوگئی ،چوہدری خورشید بیگ


ڈھڈیال( نامہ نگار) ضلع کونسل چکوال کے وائس چیئرمین چوہدری خورشید بیگ نے کہا ہے کہ چکوال کی عوام نے مسلم لیگ ن کے نامزد امیدوار چوہدری حیدر سلطان کو بھاری اکثریت سے کامیاب کروا کر عوامی عدالت میں سرخرو ہوگئی ۔ وہ راول نیوز سے گفتگو کررہے تھے ۔انہوں نے کہا کہ ہم اللہ تعالیٰ کے انتہائی شکرگزار ہیں جس کی مدد سے آج ملک میں چکوال کی عوام کے سر فخر سے بلند ہوگئے ہیں۔ عوام طاقت نے سیاسی مخالفین کو روند ڈالا جو بہت بلند وبانگ دعوے کررہے تھے ۔ چوہدری خورشید بیگ نے کہا کہ ہم تمام لیگی ووٹرز کے شکرگزار ہیں جنہوں نے مسلم لیگ ن کی بھاری اکثریت سے کامیابی میں اہم کردار ادا کیااور یہ ثابت کردیا کہ سازشی مسلم لیگ ن کے راستوں میں دیوار نہیں بن سکتے۔

نوید اسلم فرحت سے اظہار تعزیت

سید اڈا ( نامہ نگار) سرپرست اعلی پریس کلب دولتالہ سید منور نقوی,  رانا ابرار صدف, قاسم علی قاسم اور وائس چئیرمین سیلمان فاونڈیشن سیلم شیخ کی نوید اسلم فرحت کے گھر آمد اور خالہ زاد بھائی کی وفات پر تعزیت و فاتحہ خوانی کی

error: