گرما گرم خبریں

نیا پاکستان بنانے کیلئے پرعزم ہیں،چوہدری جاوید کوثر ایڈووکیٹ
پولیس پٹرولنگ پولیس ٹھاکرہ موڑ چوکی نے مختلف کاروائیوں میں چھ مقدمات درج
نیشنل ہائی وے اینڈ موٹر وے پولیس سیکٹر نارتھ ٹو کی سالانہ ایوارڈ تقریب کا انعقاد
کمپیوٹرائزڈ لینڈریکارڈ سنٹر گوجرخان عوام کیلئے دردسر بن گیا
تحریک انصاف میں شمولیت پر راجہ حسیب کیانی کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں،رضوان ہاشمی
ضلع چکوال کی سیاست میں آنے والے چند دنوں میں بڑی سیاسی تبدیلیاں رونما ہورہی ہیں
چوہدری زاہد جٹ نے اپنی برادری سمیت تحریک انصاف میں شامل ہونے کا اعلان کردیا

Archive for: May 23rd, 2018

شو کت عزیز بھٹی کی نا اہلی گو جر خان کی سیاست میں بڑی تبدیلیاں متوقع 

گو جر خان(نامہ نگار) مسلم لیگ ن کے ایم پی اے شو کت عزیز بھٹی کی نا اہلی کے عدالتی فیصلہ سے مسلم لیگ کو گو جر خان میں شدید نقصان پہنچا ہے اور گو جر خان کی سیاست میں بڑی تبدیلیاں متوقع ہیں اگر چہ شوکت بھٹی کی طرف سے اپنے بھائی احمد عزیز بھٹی کو آ مدہ انتخا بات میں حلقہ پی پی 9 سے امیدوار نا مزد کیا گیا ہے مگر بظاہر انکا مسلم لیگ سے کو ئی تعلق نہیں اور انکو ٹکٹ ملنا محال ہے اس حلقہ میں ن لیگ کے پاس اورمضبوط امیدوار مو جود ہیں شوکت بھٹی کی نا اہلی ن لیگ کے لیے ایک نا قابل تلافی نقصان ہے کیونکہ وہ گو جر خان میں ہمیشہ ایک مقبول را ہنما رہے ہیں انہوں نے ق لیگ کے امیدوار کی حیثیت سے اس وقت صو بائی اسمبلی کے انتخا بات میں کا میابی حاصل کی جب ق لیگ کا ہر طرف صفا یا ہو گیا تھا ۔اس سیشن میں وہ نواز شریف کے ساتھ مل گئے اور 2013میں ممبر صو بائی اسمبلی منتخب ہو نے کے بعد بہت جلد انکا جعلی ڈگری کا کیس سا منے آ گیا اور وہ معطل ہو گئے مگر اسکے باوجود انکا لا ہور را بطہ بڑا گہرا اور مضبوط رہا اور انہوں نے لو گو ں کے کا فی کام کروائے اب انکے انتخا بی عمل میں باہر ہو نے سے گو جر خان کی سیاست ہی بدل گئی ہے اسکا فائدہ پیپلز پارٹی کے امیدوار را جہ پر ویز اشرف اور پی ٹی آئی کے امیدواروں کو ہو گا ۔ شو کت عزیز بھٹی کو نا اہل دلوانے میں شروع کے دنوں میں چو ہدری ریاض اور اور اب پرویز اشرف کا بڑا ہا تھ ہے ۔ اگر آ نے والے دنوں میں ن لیگ نے حلقہ پی پی 9سے شو کت بھٹی کے بھا ئی احمد بھٹی کو ٹکٹ نہ ملا تو ن لیگ شو کت بھٹی کی حمایت کی امید نہ رکھے

گرین ایریا زمیں عمارتی سا مان ریت اور بجری کی فروخت اور عمارتی وبال جان بن گیا


گو جر خان(نامہ نگار) بلدیہ کی عدم توجہی اور ناقص حکمت عملی کے باعث شہرکے گرین ایریا زمیں عمارتی سا مان ریت اور بجری کی فروخت اور عمارتی ملبہ پھینکنے سے شہرنہ صرف گندا ہو رہا ہے بلکہ لو گو ں کو بھی شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ ہر شہر میں بلدیہ اپنے علاقوں پر نظر رکھتی ہے روڈز کی کھدائی ہو یا عمارتی سامان کا کچرا سر کاری اراضی میں پھینکنے کا معاملہ بلدیاتی افسران فورا موقع پر پہنچ کر کاروائی کر تے ہیں مگر گو جر خان میں ایسا کچھ بھی نہیں ہے بلدیہ گو جر خان کی طرف سے اس عمل کو رو کنے کے لیے کو ئی حکمت عملی تر تیب نہیں دی گئی۔ اس وقت شہر حدود میں جی ٹی رو ڈ کے ساتھ ساتھ ہر طرف نا جا ئز منا فع خو رو ں نے جگہ جگہ ریت ، بجری اور مٹی کے ڈھیر لگا رکھے ہیں جنکی نقل و حر کت کے با عث گند میں مزید اضا فہ ہو تا ہے دو سری طرف شہر میں گرا ئی جا نے والی تمام عمارتوں کا ملبہ بغیر رو ک ٹوک کے گرین ایر یا میں پھینک دی جا تا ہے بلدیہ نے ان کا موں کی رکا وٹ کے لیے کو ئی منصو بہ بندی نہیں کی ہے اگر چہ تجا وزات اور غیر قانونی اقدا مات کے خلاف بلدیہ گو جر خان میں قوانین بھی مو جود ہیں اور اہلکا روں کی ڈیو ٹیاں بھی لگا ئی گئی ہیں مگر باز پرس نہ ہو نے اور چیک اینڈ بینس کا نظام نہ ہو نے سے بہت زیا دہ خرا بی پیدا ہو رہی ہے ۔ شہریوں نے چئیرمین بلدیہ گو جر خان شاہد صراف اور ٹی ایم او احمد شجاع سے مطا لبہ کیا ہے کہ وہ اس اہم معا ملہ کی جا نب تو جہ دیں اور شہر کو صاف ستھرا بنا نے کے لیے عملی اقدا مات کریں سڑکیں توڑ نے والوں کے خلاف کا روائی کریں اور عمارتی کچرا بلدیہ کی حدود میں پھینکنے والوں کے خلاف بھر پور کاروائی کریں

مندرہ چکوال شاہراہ کو چھ سال میں بھی مکمل کروانے میں ناکام رہے ہیں


ڈھڈیال ( نامہ نگار )دواضلاع کے مسلم لیگ ن کے اراکین اسمبلی دواضلاع سے گزرنے والی اور دو وزراء اعظم کی افتتاح کردہ مندرہ چکوال شاہراہ کو چھ سال میں بھی مکمل کروانے میں ناکام رہے ہیں۔ تفصیلات کے مطابق مندرہ چکوال روڈ کی تعمیر وتوسیع کے منصوبہ کا افتتاح پہلی مرتبہ سابق وزیر اعظم راجہ پرویز اشرف نے6ستمبر2012اور دوبارہ نااہل وزیراعظم نوازشریف نے 16جولائی 2014کو کیا تھا اور اس منصوبہ کی تکمیل کیلئے ایک سال کا عرصہ مقرر کیا گیا مگر باوجود کہ یہ شاہراہ جن دو اضلاع سے گزرتی ہے وہاں سے مسلم لیگ ن کے اراکین قومی وصوبائی اسمبلی جن میں راجہ جاوید اخلاص، میجر(ر) طاہر اقبال ، عفت لیا قت علی خان، چوہدری لیا قت علی خان مرحوم، راجہ شوکت عزیز بھٹی اور سینیٹر لیفٹیننٹ جنرل (ر) عبدالقیوم منتخب شدہ ہیں اس کے باوجود بھی یہ اراکین اس چھوٹی سی شاہراہ کو چھ سال میں بھی پایہ تکمیل تک نہیں پہنچا سکے ہیں اور اب بھی اس کی تکمیل کے بقایا جات کام نہایت سست روی سے جاری ہیں خصوصاً مندرہ کے نزدیک ریلوے فلائی اوورکی تعمیر کا کام جو کہ ان اراکین کیلئے باعث شرم وندامت ہے

سول سو سائٹی اپنا بھر پور کردار ادا کرے، چو ہدری عفان افتخار ایڈو کیٹ 


گو جر خان(نامہ نگار) گو جر خان بار کے سینئر وکیل چو ہدری عفان افتخار ایڈو کیٹ نے کہا ہے کہ گذشتہ تین دنوں میں دو نو جوانوں کی پا نی میں ڈوب کر مرنے پر سول سو سائٹی اور سیاسی و سماجی حلقوں میں مقامی انتظامیہ پر شد ید تنقید کی جا رہی ہے ۔گذشتہ سالوں میں بھی سکو لوں اور کا لجوں میں چھٹیوں کے موقع پر کئی نو جوان پا نیوں میں ڈوب کر دنیا سے چل بسے اس سلسلے میں سخت عوامی رد عمل بھی سامنے آ یا مگر مقامی انتظامیہ نے بالکل بھی کو ئی اقدا مات نہیں کئے ۔ اب جیسے ہی تعلیمی اداروں سے چھٹیاں شروع ہی ہو ئی ہیں ایک نو جوان ڈونگی ڈیم اور دوسرا دریالہ خاکی کے قریب بر ساتی نالہ میں ڈوب کر چلا بسا چو ہدری عفان افتخار نے کہا کہ مقامی انتظامیہ اگر نو جوا نوں کی زندگیاں بچا نا چاہتی ہے تو بہت سے اقدا مات لے سکتی ہے مگر وہ خا موش تماشائی کا کردار ادا کر رہی ہے حکومت وقت اور اسکے ذمہ دا ران کا فرض ہے کہ وہ مل بیٹھیں اور اسکا کوئی حل نکا لیں انتظامیہ چا ہے تو بلدیاتی نمائندوں اور نما یا ں شخصیات کی خدمات حاصل کر سکتی ہے مجھے خدشہ ہے کہ اگر خدانخواستہ کوئی اور واقعہ رونما ہو گیا تو لوگ انتظامیہ کے خلاف سڑکوں پر نہ آجا ئیں

ڈپٹی ڈائریکٹر انفارمیشن چکوال تابندہ امجد کی ڈاکٹر ظہیر احمد خان یوسفی سے ملاقات 


ڈھڈیال ( نامہ نگار )ڈپٹی ڈائریکٹر انفارمیشن چکوال تابندہ امجد نے گزشتہ روز رمضان بازار کے دورہ کے بعد ڈھڈیال پریس کلب کے صدر ڈاکٹر ظہیر احمد خان یوسفی سے ان کے آفس میں ملاقات کی ۔صدر پریس کلب ڈاکٹر ظہیر احمد خان یوسفی نے انہیں ڈھڈیال پریس کلب کے بارے میں تفصیلی بریف کیا۔ا س موقع پر تابندہ امجد نے یقین دلایا کہ ضلع چکوال کے کسی بھی پریس کلب کو کسی بھی کام کے بارے میں ہمارا محکمے کی ضرورت پڑی تو ہمارا محکمہ ہر وقت حاضر ہے

جاتلی کے نواحی علاقہ موضع جھونگل میں چار دنوں سے بجلی غائب


جاتلی(نمائندہ خصوصی)جاتلی کے نواحی علاقہ موضع جھونگل میں چار دنوں سے بجلی غائب عوامی نمائندوں نے آنکھیں موند لیں تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ(ن)کے رہنما چوہدری عامر گجر نے اپنے ایک بیان میں کہا ہے کہ جھونگل گاؤں میں چار دنوں سے مسلسل بجلی غائب ہے سخت گرمی میں روزہ دار مشکلات کا شکار ہیں سحر و افطاری اندھیرے میں کی جاتی ہے بجلی نہ ہونے کی وجہ سے وہ طالب علم جن کے پیپرز ہورہے ہیں بری طرح متاثر ہو ئے ہیں اور جھو نگل کے عوام پانی کی بوند بوند کو ترس گئے ہیں علاقے میں لگا ٹرانسفارمر پچھلے ہفتے خراب ہو گیا تھا سکھو واپڈا افسران سے رابطہ کیا گیا تو انہوں نے پیسوں کی ڈیمانڈ کی پیسے نہ دینے پر تاحال سارا گاؤں اندھیرے میں زندگی بسر کرنے پر مجبور ہے مسلم لیگی رہنما عامر گجر نے یہ بھی کہاکہ میں مسلسل عوامی نمائندوں سے رابطہ کرنے کی کوشش کر رہا ہوں مگر وہ بھی فون نہیں اٹھارہے جس پر میں بہت دل برداشتہ ہوا انکا کہنا ہے کہ ہم اعلیٰ احکام سے پر زور اپیل کرتے ہیں کہ ہمارا یہ درینہ مسلہ جلد از جلد حل کرا یا جائے

شوکت بھٹی کی نااہلی سے گوجرخان میں تھانہ کچہری کی سیاست کا دروازہ بند ہوگیا،محمدارسلان قریشی ایڈوکیٹ 


سکھو (نمائندہ خصوصی) سپریم کورٹ نے کالی بھیڑوں کو پاکستان کی سیاست سے آوٹ کردیا، شوکت بھٹی کی نااہلی سے گوجرخان میں تھانہ کچہری کی سیاست کا دروازہ بند ہوگیا، ان خیالات کا اظہار پاکستان تحریک انصاف یوسی سکھو کے سینئیر نائب صدر محمدارسلان قریشی ایڈوکیٹ نے گزشتہ روز اپنے ایک بیان میں کیا، انہوں نے کہا کہ تحصیل گوجر خان کی غیور عوام کو قبضہ مافیا،ٹاؤٹ مافیا ، کمیشن مافیا، جرائم پیشہ ، کرپٹ اور جعلی ڈگری والے جعلی لیڈر سے تا حیات چھٹکارے پر دل کی گہرائیوں سے مبارکباد پیش کرتے ہیں اور سپریم کورٹ آف پاکستان کے تاریخ ساز فیصلے کا خیر مقدم کرتے ہیں، ایڈوکیٹ محمدارسلان قریشی نے کہا کہ عوام کرپٹ مافیا کے خلاف اٹھ کھڑی ہے اور آج گوجر خان سے تھانہ کچہری اور جھوٹے سیاسی مقدمات والی سیاست کا ہمیشہ کے لیے خاتمہ ہو گیا،عوام کی بدقسمتی رہی کہ ایک نا اہل شخص 6 سال ایم پی اے رہا جبکہ پچھلے 4 سال سے معطلی کی وجہ سے اہلیان علاقہ ایم پی اے کی نشست سے محروم رہے، جس کی وجہ سے علاقائی مسائل کا کوئی پر سان حال نہ تھا،انہوں نے کہا کہ اب عوام کی آنکھیں کھل چکی ہیں اور 2018 کے الیکشن میں نا اہل لیگ اور اس کے کرپٹ ٹولے کو یکسر مسترد کر دے گی اور پاکستان تحریک انصاف کے امیدوار چوھدری ساجد محمود کو بھاری اکثریت سے جتوا کر یہ ثابت کر دے گی کہ اب گوجرخان کی عوام کسی جعلی ڈگری والے کے ہتھکنڈوں میں آنے والی نہیں،عوام اپنے بہتر مستقبل اور علاقہ میں شرافت کی سیاست کے فروغ کے لیے پاکستان تحریک انصاف کے علاوہ کسی اور پر بھروسہ نہیں کرے گی، ایڈوکیٹ محمدارسلان قریشی نے کہا کہ جیت بالآخر حق سچ اور انصاف کا مقدر ہو گی.

error: